45

لورالائی: دہشتگردی کا بڑا منصوبہ ناکام، اہلکار سیسہ پلائی دیوار بن گئے

لورالائی: لورالائی ڈی آئی جی کمپلیکس پر حملے میں تین پولیس اہلکار فرض پر قربان، پانچ سول ملازمین اور ایک امیدوار شہید جبکہ اکیس افراد زخمی ہوئے، جوابی کارروائی میں تین دہشتگرد مارے گئے، چار گھنٹے بعد آپریشن مکمل کر لیا گیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق سہ پہر تین خود کش بمباروں نے ڈی آئی جی پولیس آفس لورالائی احاطہ میں داخل ہونے کی کوشش کی تو ڈیوٹی پر موجود پولیس اہلکاروں نے تین میں سے ایک خود کش حملہ آور کو داخلی راستہ پر مار دیا، ہلاک ہونے والے خود کش دہشت گرد نے خود کو اڑا بھی دیا جبکہ باقی دو خود کش بمبار اندھا دھند فائرنگ کرتے ہوئے ساتھ بنے کمروں میں داخل ہو گئے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق اس وقت کمپلیکس میں بلوچستان پولیس میں بھرتی کے لیے 800 امیدوار موجود تھے۔ واقعہ میں 9 افراد جن میں 3 پولیس اہلکار، 5 سول ملازم اور ایک امیدوار شہید ہو گیا۔ دہشتگردوں کی فائرنگ سے بارہ پولیس اہلکار اور نو امیدوار زخمی ہوئے۔ زخمیوں کو آرمی ہیلی کاپٹرز پر سی ایم ایچ کوئٹہ منتقل کیا گیا۔

حملے کی اطلاع ملتے ہی ایف سی بلوچستان اور پاک فوج کو طلب کیا گیا۔ فوج نے 800 امیدواروں کو بحفاظت کمپلیکس سے نکالا۔ آپریشن کے دوران باقی دو خود کش بمبار مارے گئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں